سیاسی

سیاسی (124)



 
سید ثاقب اکبر نقوی

”کرونا“ اگرچہ ایک عالمگیر وبا و ابتلا کی صورت میں دنیا میں رونما ہوئی ہے، تاہم اس سے انکار نہیں کیا جاسکتا ہے کہ کرونا کے بعد کی دنیا کرونا سے پہلے کی دنیا سے بہت مختلف ہوگی۔ اس عالمی وباء کے دوران میں ایسے ایسے معنوی و مادی حقائق سامنے آئے ہیں، جو اس سے پہلے اتنے نمایاں طور پر دنیا کے سامنے نہیں تھے۔ اس سلسلے میں ہم اپنے قارئین کی خدمت میں پہلے بھی عرض کرچکے ہیں کہ کرونا کے دوران میں سرحدیں بے معنی ہوگئیں ہیں، قوموں کی تقسیم مٹ گئی ہے، مذاہب اور ادیان کی بنیاد پر انسانوں کی تفریق بھی پا در ہوا ہوگئی ہے۔ کرونا نے جرنیلوں، سیاستدانوں، حکمرانوں، علماء، مشائخ، ڈاکٹروں اور عام لوگوں میں سے کسی کو پرکاہ کی اہمیت نہیں دی۔ مشرق و مغرب اور شمال و جنوب سب کرونا کے ہاتھوں بے حال دکھائی دیے ہیں۔ گورے اور کالے، سب کے ساتھ کرونا ایک طرح سے برتاؤ کرتا رہا ہے اور اب بھی بہت سے مقامات پر اس کی حشر سامانیاں دیکھی جاسکتی ہیں اور بعض علاقوں میں اس کے لوٹ آنے کی خبریں بھی آرہی ہیں۔
 



 
سید ثاقب اکبر نقوی

امریکا عراق میں ایک پیچیدہ اور خفیہ مشن کی تکمیل کے درپے ہے۔ وہ ہر اس قوت کو عراق سے ختم کر دینا چاہتا ہے، جو اسکے عراق پر قبضے کیخلاف آواز اٹھا سکے یا اسکے استعماری مقاصد میں حائل ہوسکے۔ اس کیلئے اسکے پاس آسان راستہ یہ ہے کہ اسکے خلاف بولنے والے ہر فرد اور گروہ کو ایرانی ایجنٹ قرار دیدے، حالانکہ عراق کی منتخب پارلیمان امریکی افواج کے عراق چھوڑنے کی قرارداد منظور کرچکی ہے اور اسکا تقاضا عراقی حکومت بھی کرچکی ہے۔ ویسے بھی عراق عراقیوں کا ہے، امریکیوں کا نہیں۔ امریکا کی کوشش یہ ہے کہ عراق کے وسائل اسکی گرفت میں رہیں، اس کیلئے اسکے کئی منصوبے ناکام ہوچکے ہیں۔



 
سید ثاقب اکبر نقوی

جب کبھی مسلمان خاص طور پر عرب فلسطینیوں کے حقوق کے بارے میں بظاہر سنجیدہ تھے، بھارت اسرائیل سے اپنے تعلقات کو مخفی رکھے ہوئے تھا۔ اب فلسطینی حقوق کے دعویدار عرب اسرائیل سے دوستی کی پینگیں بڑھانے میں ایک دوسرے پر سبقت لے جانے کی کوشش کر رہے ہیں تو ایسی صورت حال میں بھارت کو اسرائیل سے اپنے خفیہ مراسم اور دیرینہ آشنائی کو چھپانے کی کیا ضرورت پڑی ہے، لہذا بات اب سر بام آگئی ہے۔



 
سید اسد عباس

کشمیری پانچ اگست 2019ء سے اپنے گھروں میں قیدیوں کی زندگی بسر کرنے پر مجبور ہیں۔ بھارتی فوج نے وادی میں، مارکیٹیں، بزنس اور پبلک ٹرانسپورٹ بند کر رکھی ہے، ادویات کی کمی کی وجہ سے مریض جان سے ہاتھ دھونے لگے ہیں۔ اپنے گھروں میں بھی کشمیریوں کو سکھ کا سانس لینے کی اجازت نہیں ہے۔



 
سید ثاقب اکبر نقوی

آج (22 مئی 2020ء) کو جب عالمی یوم القدس منایا جا رہا ہے، ہمیں جہاں فلسطینیوں کی کربناک صدائیں سنائی دے رہی ہیں، وہاں کشمیریوں کی فریادیں بھی بلند ہیں اور سینوں کو چھلنی کئے دیتی ہیں۔ شاید ابھی کم لوگ اس مسئلے کی طرف متوجہ ہیں کہ بھارتی برہمن سامراج اور صہیونی درندہ صفت گماشتوں کے باہمی روابط دیرینہ ہیں اور دونوں فلسطینیوں اور کشمیریوں کی نسل کشی اور ان کے حقوق کو غصب کرنے کے لیے ایک جیسی پالیسیوں پر عمل پیرا ہیں۔





 
سید اسد عباس

یہ بیسویں صدی کے آغاز کی بات ہے کہ جب سعودیہ کے شاہ عبد العزیز اپنے والد عبد الرحمن بن فیصل کے ہمراہ کویت میں تین کمروں کے مکان میں پناہ گزین تھے۔



 
سید اسد عباس

کورونا اس وقت امریکہ اور یورپ میں خون آشامیاں جاری رکھے ہوئے ہے، امریکہ میں ہلاکتوں کی تعداد چند روز میں 6000 سے تجاوز کرچکی ہے، جبکہ دنیا میں کورونا وائرس سے ہلاکتوں کی تعداد 55 ہزار 132 ہوگئی ہے اور اس سے متاثر ہونے والے افراد کی تعداد 10 لاکھ 41 ہزار سے تجاوز کرچکی ہے، جبکہ دنیا میں اب تک دو لاکھ 21 ہزار 262 افراد صحتیاب بھی ہوئے ہیں۔



 
سید ثاقب اکبر نقوی

کورونا وائرس اپنی حشر سامانیوںکے ساتھ ابھی دنیا میں پھیلے جا رہا ہے۔ کسی ایک ملک میں اگر اس پر کسی حد تک قابو پا بھی لیا گیا ہے تو کئی دوسرے ملکوں میں اس کی لائی ہوئی ہولناکیاں نمایاں ہوتی جارہی ہیں۔



دنیا کا طاقتور ترین ملک امریکہ آج کہاں کھڑا ہے یہ وہ ملک ہے جس کو باہر سے دیکھنے والے دنیا کی محفوظ ترین جگہ تصور کرتے ہیں۔یہاں دنیا کی ہر سہولت کا خیال رکھا جاتا ہے اور پوری دنیا کے باسی یہاں رہنے کو اپنے لیے محفوظ سمجھتے ہیں



 
سید اسد عباس

عالمی ادارہ صحت نے تمام ممالک کو یہ اقدامات اٹھانے کے لیے کہا ہے کہ ایمرجنسی کی صورتحال سے نمٹنے کے میکینزم کو مؤثر اور بہتر بنایا جائے۔ عوام کو وائرس کے خطرات سے آگاہ کیا جائے اور بتایا جائے کہ لوگ اپنے آپ کو کیسے محفوظ رکھ سکتے ہیں۔

تازہ مقالے

تلاش کریں

کیلینڈر

« May 2021 »
Mon Tue Wed Thu Fri Sat Sun
          1 2
3 4 5 6 7 8 9
10 11 12 13 14 15 16
17 18 19 20 21 22 23
24 25 26 27 28 29 30
31            

تازہ مقالے