جمعرات, 20 فروری 2020 06:42




کہاں یہ نعتِ نبیؐ اور کہاں یہ ذات مری
مدد کو آئیے مولائے کائنات مری

 

اے نورِ اوّل ہستی تجھی سے وابستہ
اِدھر حیات مری اور ادھر نجات مری

تمھارے ذکر کے پر تو نے دن اُجال دیا
تمھاری یاد سے روشن رہی ہے رات مری


تمھارے نام کی تسبیح ہوں مری سانسیں
تمھاری نعت میں ڈھل جائے بات بات مری

تمام رات رہا ذکر لیلۃ الاسریٰ
اسی سبب سے ہوئی شب، شب برات مری

نبیؐ و آلِ نبیؑ پر درود بھیجا ہے
مجھے یقین ہے مقبول ہے صلٰوۃ مری

 ہے میرے ہاتھ میں دامانِ صاحب بُرّاق
نہ راہ روک سکیں لات اور منات مری


* * * * *

Read 464 times