سید اسد عباس

معروف امریکی فلسفی اور لکھاری نوم چومسکی کا کہنا ہے کہ امریکی زوال کی ابتدا جنگ عظیم دوئم کے بعد سے ہوچکی ہے۔ عروج اور زوال ایک وسیع مفہوم ہیں عروج کو اگر فقط مادی نگاہ سے دیکھا جائے تو مادی میدانوں میں ترقی یا تنزلی کو ہی عروج و زوال کے پیمانے کے طور پر دیکھا جائے گا۔ اگر مادی کے ساتھ ساتھ معنوی اور سماجی ترقی اور تنزلی کو بھی مدنظر رکھا جائے تو عروج و زوال کے معنی بدل جائیں گے۔ خود امریکی لکھاریوں کے مطابق ان کے عروج کی بنیادیں معیشت، فوجی قوت اور ثقافتی برتری پر قائم ہیں۔ امریکہ میں بہت سے ایسے دانشور موجود ہیں، جو اس بات کے قائل ہیں کہ امریکہ زوال پذیر ہے اور موجودہ دہائی میں اس زوال میں بے پناہ اضافہ ہوچکا ہے۔

Published in سیاسی


 
سید ثاقب اکبر نقوی

اس میں تو اب عالمی سطح پر کسی کو شک نہیں رہا کہ چین امریکہ تنائو آگے کی طرف بڑھ رہا ہے۔ بعض تجزیہ کاروں کی رائے یہ ہے کہ امریکہ کی حکمران قیادت کو اس تنائو کی ضرورت آئندہ انتخابات تک ہے۔ اس بات کو قبول کرتے ہوئے کہ سیاستدان اور خاص طور پر ٹرمپ اور مودی جیسے سیاستدان کسی ملک سے تنائو اور نفرت بڑھانے کو اپنے سیاسی مفادات کے لیے استعمال کرتے ہیں، لیکن دونوں ملکوں کے مابین تنائو کے محرکات کو جاننے والے اچھی طرح سے جانتے ہیں کہ یہ فوری اور سطحی نہیں ہیں۔

Published in سیاسی
سوموار, 22 جون 2020 16:02

آہنی سلاخوں سے جنگ



 
سید اسد عباس

گذشتہ دنوں لداخ کی وادی گلوان میں چین اور بھارت کی افواج کے مابین ہونے والی جھڑپ میں ایک کرنل سمیت بیس بھارتی فوجی ہلاک ہوگئے جبکہ متعدد بھارتی فوجی چین کی گرفت میں چلے گئے، جنہیں بعد ازاں رہا کر دیا گیا۔

Published in سیاسی
الجمعة, 29 مئی 2020 14:30

چین کی لداخ میں پیشقدمی



 
سید اسد عباس

بھارت اور چین کا سرحدی تنازع قدیم ہے۔ ان دونوں ممالک کے درمیان تین ہزار 488 کلومیٹر کی مشترکہ سرحد ہے۔ یہ سرحد جموں و کشمیر، ہماچل پردیش، اتراکھنڈ، سکم اور اروناچل پردیش میں انڈیا سے ملتی ہے اور اس سرحد کو تین حصوں میں تقسیم کیا گیا ہے۔

Published in سیاسی


 
سید ثاقب اکبر نقوی

کرونا کی وبا شروع ہونے کے چند ہفتے بعد ہی بہت سے دانشوروں کو یہ احساس ہوگیا تھا کہ کرونا کے بعد کی دنیا مختلف ہوگی، جوں جوں وقت گزرتا گیا، یہ خیال پختہ بھی ہوتا گیا اور اس پر یقین کرنے کے لیے شواہد بھی سامنے آنے لگے۔

Published in سیاسی


 
سید ثاقب اکبر نقوی

کرونا کا جھٹکا اگرچہ ابھی جاری ہے اور یہ نہیں کہا جاسکتا کہ ابھی مزید کتنا عرصہ اور کس قوت سے جاری رہے گا۔ تاہم اب تک جو حقائق سامنے آئے ہیں، ان کی بنیاد پر کچھ مستقبل کا اندازہ کیا جاسکتا ہے،

Published in سیاسی



 
 ڈاکٹر سید علی عباس

دنیا بھر میں کرونا وائرس کے وحشت آفرین پھیلاؤ سے ایک بار پھر آشکار ہو گیا کہ انسان بہت کمزور ہےاور اس کائنات کے اوپر حکم فرما ایک بہت بڑی طاقت ہے جس کے سامنے امریکہ، روس، چین جیسی طاقتیں کمزورثابت ہوگئی ہیں اور جوخزاں رسیدہ پتوں اورشاخوں کی طرح ہےبکھرتی اور لرزاں دکھائی دیتی ہیں۔

Published in سیاسی
اتوار, 22 مارچ 2020 09:13

ایک جرثومہ جو نظر نہیں آتا



 
سید اسد عباس

انسان اشرف المخلوقات ہے اور اس دنیا کی قوی ترین مخلوق تصور کی جاتی ہے، اگرچہ جسمانی طور بہت سی مخلوقات اس سے قوی ہیں، تاہم اس کو یہ صلاحیت دی گئی ہے کہ قوی سے قوی مخلوق کو اپنے زیر نگیں کر لے۔ اپنی عقل کے ذریعے طبعی اصولوں کو قابو میں لا کر یہ فضا میں اڑنے کے قابل ہوچکا ہے، کشش ثقل کا مضبوط کڑا توڑ کر خلا میں داخل ہوگیا ہے، آواز کی رفتار سے سفر کرنے والی سواریاں بنا رہا ہے، ایٹم کا سینہ چیر کر اس سے توانائی کو اخذ کر رہا ہے۔

Published in سیاسی


 
سید اسد عباس

خطرناک امر یہ ہے کہ حکومت کا پورا زور تفتان اور وہاں سے آنیوالے زائرین پر ہے، جبکہ فضائی سفر کے ذریعے ملک میں آنیوالے افراد کو کسی ایسے قرنطینیہ سے نہیں گزارا جا رہا۔ وہ مریض جو خود ہسپتال آرہے ہیں، وہی مصدقہ قرنطینیہ مریضوں کی Category میں شامل ہیں، باقی کے افراد متاثرہ ملکوں سے آنے کے باوجود معاشرے میں اپنی نارمل سرگرمیاں برقرار رکھے ہوئے ہیں۔

Published in سیاسی


 
سید اسد عباس

عالمی ادارہ صحت نے تمام ممالک کو یہ اقدامات اٹھانے کے لیے کہا ہے کہ ایمرجنسی کی صورتحال سے نمٹنے کے میکینزم کو مؤثر اور بہتر بنایا جائے۔ عوام کو وائرس کے خطرات سے آگاہ کیا جائے اور بتایا جائے کہ لوگ اپنے آپ کو کیسے محفوظ رکھ سکتے ہیں۔

Published in سیاسی

تازہ مقالے

تلاش کریں

کیلینڈر

« October 2020 »
Mon Tue Wed Thu Fri Sat Sun
      1 2 3 4
5 6 7 8 9 10 11
12 13 14 15 16 17 18
19 20 21 22 23 24 25
26 27 28 29 30 31  

تازہ مقالے