ہفته, 07 مارچ 2020 16:58




تجھے پاکر _____ 
میں سمجھا ہوں کہ مجھ میں یہ ہنر بھی ہے

 

پھٹا جاتا ہو درد  و  کرب سے سینہ
غموں کے بوجھ سے دل کا سفینہ ڈوبنے کو ہو
پڑا ہو بارِ کوہ غم مرے کمزور کندھوںپر
میں پھر بھی _____
مسکرالوں گا
 تبسم کی کئی کرنیں لبوں پر میں سجالوں گا
مسرت کے ترانے گنگنالوں گا
کہانی اپنی خوشیوں کی ندیموں کو سنالوں گا
تجھے پاکر میں سمجھا ہوں
کہ مجھ میں یہ ہنر بھی ہے


تجھے پاکر_____ میں سمجھا ہوں:

مرا دل ایک صحرا ہے_____وہ اک صحرائے پہناور
مرا دل اک سمندر ہے_____ وہ اک دریائے بے ساحل
مرا دل ایک دنیا ہے _____وہ اک دنیائے لامحدود
یہ وہ صحرا ہے_____
جس میں کشتِ خارِ غم بڑی راحت سے اُگتی ہے
یہ وہ کھیتی ہے_____
ہر موسم میں بے حد جو فراواں ہے
یہ ایسا اک سمندر ہے_____ کہ
جس میں درد کی موجیں بڑی طوفانی ہوتی ہیں
تجھے پاکر_____میں سمجھا ہوں

* * * * * 

Read 144 times