یمن

پراکسی وار ایک زاویہ نگاہ

تحریر: سید اسد عباس تقوی

قارئین کرام!
اسرائیل نے فلسطین کی سرزمین پر قبضہ ایران کے کہنے پر کیا تھا، تاکہ وہاں حماس اور جہاد فلسطین کے نام سے پراکسیز کو وجود میں لایا جاسکے! اسی طرح لبنان پر بھی اسرائیل نے ایران کے کہنے پر قبضہ کیا تھا، تاکہ لبنان میں ایرانی پراکسی حزب اللہ تشکیل پاسکے۔ افغانستان پر حملے کے لئے سوویت یونین کو بھی ایران نے ہی ابھارا تھا، تاکہ وہاں پر ایران اپنی پراکسی کو وجود میں لاسکے۔ بحرین کے حکمرانوں نے اپنے عوام کو ایران کے کہنے پر ہی بنیادی انسانی حقوق سے دور رکھا، تاکہ وہاں بھی ایران سے ہمدردی کے جذبات کو فروغ دیا جاسکے۔

  • مشاہدات: 1145

اے پتر ہٹاں تے نہیں وکدے؟

تحریر: سید اسد عباس تقوی

جب سے سنا ہے کہ پاکستانی فوجی یمن کے عوام کے خلاف سعودی سربراہی میں جاری خلیجی آپریشن میں شرکت کے لیے جا سکتے ہیں دل ڈوبنے سا لگا ہے۔ ہم نے تو اپنے سجیلے جوانوں کے بارے میں سن رکھا تھا کہ:

  • مشاہدات: 1088

سعودی ایران یا اسرائیل ایران پراکسی؟

تحریر: ثاقب اکبر

مشرق وسطیٰ کے مسائل کو عام طور ہمارے ہاں سعودی ایران پراکسی جنگ کے عنوان سے بیان کیا جاتا ہے۔ یہ عنوان ہمارے ہاں کے دانش وروں نے نہیں دیا بلکہ جنھوں نے آتشِ جنگ بھڑکائی ہے انھوں نے ہی جنگ کے لیے نام اور عنوان بھی تجویز کیا ہے اور ہمارے’’ آگاہ اور باخبر دانش ور‘‘ وہی عنوان بے دریغ اور بے سوچے سمجھے استعمال کر رہے ہیں۔

  • مشاہدات: 1123