حدیث

تدوینِ حدیث

تحریر: علامہ سید مزمل حسین نقوی

ان الدین عند اللہ الاسلام
بنیادی طور پر انسانی مدنی الطبع ہے۔ یعنی تنہا زندگی نہیں بسر کر سکتا ہے۔ معاشرتی زندگی بسر کرتا ہے کیونکہ انسان کو زندہ رہنے کے لیے مکان، خوراک اور لباس کی ضرورت ہے۔ یہ سب انسان اپنے لیے تنہا مہیا نہیں کر سکتا۔ اس سلسلے میں اسے دوسروں کی ضرورت پڑتی ہے لہٰذا وہ دوسروں کے ساتھ رہنے پر مجبور ہے۔ ایک کھانے کی اشیاء فراہم کرے، دوسرا لباس تیار کرے۔ کوئی بیماریوں کا علاج کرے اور کوئی رہنے کا سامان فراہم کرے۔ جب انسان ایک دوسرے کا محتاج ہے اور ساتھ رہنے پر مجبور ہے تو اسے ایک قانون کی ضرورت ہے تاکہ کسی کی حق تلفی نہ ہو اور اختلافات کی صورت میں وہ قانون ان کی مدد کرے۔ یہی وجہ ہے کہ جس معاشرہ میں قانون کی حاکمیت ہوتی ہے وہ پرامن رہتا ہے۔ جہاں لاقانونیت ہوتی ہے اس معاشرے کا امن و سکون تباہ ہو جاتا ہے۔ لہٰذا ایک قانون کا ہونا ضروری ہے۔

  • مشاہدات: 721