نائب امیرجماعت اسلامی پاکستان لیاقت بلوچ نے جنرل قاسم سلیمانی کے قتل کی امریکا کے مجرمانہ اقدام کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ہم سب جنرل قاسم سلیمانی کی شہادت میں سوگوار ہیں۔

نائب امیرجماعت اسلامی نے مرجع دینی آیت اللہ مکارم شیرازی سے خصوصی ملاقات میں امریکا کی مجرم حکومت کے ہاتھوں جنرل قاسم سلیمانی کے قتل کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ وہ عظیم جنرل اور بہت ہی محترم شخص تھے اور در حقیقت ہم سب کو ان کی شہادت کا گہرا صدمہ ہے اور ہم سب ان کے غم میں سوگوار ہیں۔

ملی یکجہتی کونسل کے سکریٹری جنرل کا کہنا تھا کہ وہ قوم جو مرجعیت اور عظیم مکتب فکر کی پروردہ ہو وہ کبھی بھی حق اور سچائی کے راستے سے پیچھے نہیں ہٹے گی اور مزاحمت کے راستے کو پوری طاقت کے ساتھ جاری رکھے گی۔

جماعت اسلامی کے نائب امیر لیاقت بلوچ کا کہنا تھا کہ آج امریکا امت مسلمہ پر حملہ آور ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ اگر اسلامی ممالک ایران کے ساتھ ہوتے اور تسلط کو قبول نہ کرتے تو حالات کچھ اور ہی ہوتے۔ ان کا کہنا تھا کہ ان ممالک کے حکام دوسروں کی خشنودی حاصل کرنے اور اس فانی دنیا کی زندگی کے بارے میں ہی سوچتے رہتے ہیں۔

نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان لیاقت بلوچ نے مرجع دینی آیت اللہ مکارم شیرازی سے ملاقات پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے ان کی تفسیرنمونہ کو بیش قیمتی اور اہم تفسیر قرآن قرار دیا۔

انہوں نے تاکید کی کہ اس تفسیر قرآن سے تمام شیعہ اور سنی استفادہ کرتے ہیں اور اس کی اہمیت کے قاتل ہیں۔ انہوں نے اسی طرح مرجع دینی کی جانب سے جاری ہونے والے فتوؤں کو بھی نہایت ہی اہم قرار دیا ۔

جماعت اسلامی کے نائب امیر اور ملی یکجہتی کونسل کے سکریٹری جنرل لیاقت بلوچ نے اسلامی جمہوریہ ایران، رہبر انقلاب اسلامی، مراجع تقلید اور ایرانی عوام کی جانب سے پاکستانی عوام کی ہونے والی حمایت کا شکریہ ادا کیا۔اسی طرح انہوں نے کشمیر کے مظلوم عوام کی حمایت پر بھی اسلامی جمہوریہ ایران، قائد انقلاب اور مراجع کرام کی قدردانی کی۔

لیاقت بلوچ نے کہا کہ پاکستانی عوام اسلامی جمہوریہ ایران سے محبت کرتے ہیں اور دونوں ممالک مل کر دنیا میں امت اسلامی کے لئے اتحاد و بھائی چارے کی ایک انمول مثال پیش کر سکتے ہیں۔